نظریہ پاکستان کا تحفظ اور کرپشن کا خاتمہ ایم ایم اے کی سیاست کا اصل مقصد ہے۔امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق

امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ نظریہ پاکستان کا تحفظ اور کرپشن کا خاتمہ ایم ایم اے کی سیاست کا اصل مقصد ہے۔ ملک کو 70سال تک اپنی منزل سے ڈی ریل کیا گیا ملک پر مسلط استحصالی اور طبقاتی نظام کی تمام تر ذمہ داری فرسودہ قیادت پر ہے۔ چہرے اور پینترے بدل کر عوام کے کندھوں پر سوار ہونا ہی ان لوگوں کی اسپیشلائزیشن ہے لیکن اب ان اژدھوں کا دور گزر چکا ہے، کوئی عالمی طاقت اور ان کی سرپرستی کرنے والی عالمی اسٹیبلشمنٹ بھی ان کو بچا نہیں سکے گی۔ ایم ایم اے 2018ءکے انتخابات میں ایک بڑی عوامی قوت بن کر سامنے آئے گی۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے اپنے حلقہ انتخاب ثمر باغ میں بڑی عوامی افطار پارٹی کے شرکا سے خطا ب کرتے ہوئے کہا۔
سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ ایم ایم اے کے منشور میں ایک اسلامی پاکستان کا پورا نقشہ موجود ہے، ہم نے عام آدمی کے مسائل کے حل کے لیے ایک مکمل ایجنڈا دیا ہے۔ انھوں نے کہا کہ ملک پر مسلط رہنے والی مصنوعی قیادت عوامی مسائل کا ادراک نہیں رکھتی، منہ میں سونے کا چمچ لے کر پیدا ہونے والے مزدوروں، کسانوں اور محنت کشوں کی پریشانیوں کو نہیں سمجھ سکتے، عام آدمی کے مسائل وہی حل کر سکتا ہے جو خود ان پریشانیوں اور مصیبتوں سے گزر کر آیا ہو۔
سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ متحدہ مجلس عمل عید کے بعد پورے ملک میں رابطہ عوام مہم کو تیز کر ے گی اور کراچی، پشاور، ملتان سمیت بڑے بڑے شہروں میں بڑے عوامی جلسے کرے گی۔ 24جون کو پشاور میں ہونے والا متحدہ مجلس عمل کا جلسہ آنے والے الیکشن کی سمت کا رخ متعین کرے گا۔ انھوں نے کہا کہ عوام اب چوروں لٹیروں اور کرپٹ مافیاز کے فریب میں نہ آئیں اور متحد ہو کر اسلامی قیادت کا ساتھ دیں۔ انھوں نے کہا کہ قومی دولت لوٹ کر بیرونی بنکوں میں جمع کرنے والے قومی مجرم ہیں انھیں اقتدار کے ایوانوں میں نہیں جیلوں میں ہونا چاہیے اور وہ وقت دور نہیں جب متحدہ مجلس عمل ان لٹیروں سے قوم کی ایک ایک پائی وصول کر کے اسے عام آدمی کی فلاح و بہبود پر خرچ کرے گی۔